ہونٹوں کو خوبصورت، دلکش، نرم و ملائم اور گلابی بنانے کے طریقے

ہونٹ ہمارے چہرے کا سب سے حساس، خوبصورت، نرم و ملائم اور پر کشش حصہ ہیں۔ چہرے کی خوبصورتی، بشاشت اور تازگی میں ہونٹوں کا اہم کردار ہوتا ہے۔ خوبصورت اور دلکش ہونٹ آپ کی خوبصورتی کو چار چاند لگا دیتے ہیں ہونٹ چہرے کے حسن کو دوبالا کر دیتے ہیں۔

ہونٹوں کو نرم و ملائم اور خوبصورت بنانے کے طریقے

خواتین کے چہرے کی خوبصورتی ہمیشہ سے ہی کشش کا سبب رہی ہے۔ بالخصوص ہونٹوں کی تازگی، دلکشی اورسرخی پر تو کئی شاعروں نے غزلیں تک لکھ ڈالیں ہیں۔شاہد یہی وجہ ہے کہ خواتین اپنے ہونٹوں کی خوبصورتی برقرار رکھنے کے لیے نت نئے طریقے اور مہنگی ترین کریموں اور لپ اسٹک کا استعمال کرتی ہیں۔

یہ بھی پڑھیے: رنگ گورا کرنے کے قدرتی طریقے

خواتین اپنی خوبصورتی کی زیادہ فکر کرتی ہیں۔ چہرے کی خوبصورتی کے ساتھ ساتھ خواتین کی خواہش ہوتی ہے کہ ان کے ہونٹ سرخ ہوں ،پلکیں اور بال لمبے اور گھنے ہوں ۔ صاف و شفاف جلد پر لمبی پلکیں اور گلابی ہونٹ حسن کو دوبالا کردیتے ہیں ۔ لیکن اگر یہی گلابی ہونٹ سیاہ پڑ جائیں تو چہرے کا سارا حسن ماند پڑ جاتا ہے ۔

ہونٹ سیاہ ہونے کی وجوہات

گلابی ہونٹ خوبصورتی کی علامت سمجھے جاتے ہیں اور اکثر شاعر لوگ بھی گلابی ہونٹوں کی تعریف اپنی اشعار میں کرتے رہتے ہیں اور ہونٹوں کو گلاب کی پنکھڑیوں سے تشبیہ دیتے ہیں۔چہرے کی خوبصورتی کے ساتھ ساتھ ہونٹوں کی خوبصورتی کسے پسند نہیں ہوتی۔ ہر کوئی اپنے سیاہی مائل ہونٹوں کوخوبصورت بنانا چاہتا ہے۔

سیاہ ہونٹوں کی کئی وجوہات ہو تی ہیں۔ جن میں سے سب سے پہلی وجہ ہونٹوں کی دیکھ بھال نہ کرنا ہے،اس کے علاوہ ناقص، گھٹیا، سستی لپ اسٹک کا استعمال ، ادویات کے منفی اثرات بھی ہونٹوں کی سیاہی کا سبب بنتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیے: چہرے کو نرم و ملائم اور خوبصورت بنانے کے لیے کھیرے کا ماسک بنانے کا طریقہ

پرانی لپ اسٹک کا استعمال بھی ہونٹوں کو سیاہ کر دیتا ہے، تاہم بعض اوقات مورثی،چھوت کی بیماری یا کوئی دوسری بیماری بھی اس کا سبب ہو سکتی ہے۔علاوہ ازیں آلودگی اور گرم موسم میں دھوپ کی وجہ سے ہونٹ متاثر ہوتے ہیں۔اور سیاہ ہو جاتے ہیں۔

ہونٹوں کی خوبصورتی اور دلکشی کے نسخے

آج ایزی استاد میں ہم آپ کو ایسے آسان ،سستے،آزمودہ، اور قدرتی نسخے بنائیں گے کہ جو نہ صرف آپ کے ہونٹوں کو گلابی اور جاذب نظر بنادیں گے بلکہ آپ کے ہونٹوں کا قدرتی حسن بھی برقرار رہے گا۔اور آپ کے ہونٹ اتنے خوبصورت اور دلکش ہو جائیں گیں کہ آپ کو خود بھی یقین کرنا مشکل ہو جائے گا۔

یہ بھی پڑھیے: دوران حمل کون کون سی غذاؤں کا استعمال کیا جائے

جب بھی آپ لپ سٹک استعمال کریں تو ہمیشہ کسی اچھی کمپنی کی لپ اسٹک خریں ،سستی اور غیر معیاری لپ اسٹک آپ کے ہونٹوں کو خراب کر دے گی ۔ اور رات کو سونے سے پہلے لپ سٹک کو اچھی طرح سے صاف کر لیں۔ نہیں تو آپ کے ہونٹ خراب ہو جائیں گے۔ اس کے بعد منہ کو کسی اچھے صابن سے دھو کر خشک کر لیں اور درج ذیل نسخوں میں سے جو آپ کو بہتر اور آسان لگے اس کا استعمال کریں۔

شہد کا استعمال

شہد قدرت کی طرف سے عطا کردہ انتہائی مفید اور شفا دینے والا عنصرہے ۔ جونہ صرف بیماریوں کا علاج کرتا ہے بلکہ اس میں چہرے کی خوبصورتی کا خزانہ بھی چھپا ہوا ہے ۔رات کو سونے سے قبل اپنے ہونٹوں پر تھوڑی مقدار میں شہد لگائیں اور ہلکا سا مساج کر کے چھوڑ دیں اور صبح اٹھ کر ہلکے گرم پانی سے دھو لیں۔ اس کے مسلسل استعمال سے سیاہی مائل داغ ختم ہوجاتے ہیں اور ہونٹوں کا قدرتی حسن لوٹ آتا ہے۔

شہد نہ صرف ہونٹوں کی سیاہی اور داغ ختم کرتا ہے بلکہ شہد اور روغن بادام کا استعمال ہونٹوں کو گلابی بھی بناتا ہے۔ روغن بادام اور شہد کو مکس کر کے روزانہ ہونٹوں پر لگانے سے ہونٹ گلابی ہو جاتے ہیں۔علاوہ ازیں اگر اگر آپ کے ہونٹ پھٹ گئے ہوں تو تھوڑا سا شہد لے کر چند قطرے لیموں کے ڈال کر پندرہ منٹ تک لگائیں پھر دھو کر بالائی لگالیں ۔یہ عمل ہفتے میں دو چار بار کرنے سے پٹھے ہوئے ہونٹ ٹھیک ہو جاتے ہیں۔

گھی کا استعمال

شہد کی طرح گھی بھی ہونٹوں کی حفاظت کرتا ہے۔ ہونٹوں کی تروتازگی کے لیے چند قطرے گھی لیں اور سونے سے قبل اپنے ہونٹوں پر لگا لیں، صبح اٹھ کر دھوکر انتہائی نرمی سے ہونٹ صاف کرلیں۔ گھی کا استعمال مردہ خلیوں کوزندگی دے کر ترو تازہ بنا دیتا ہے۔

اگر آپ کے ہونٹ پھٹے ہوئے ہیں تو رات کو سونے سے پہلے اپنے ہونٹوں پر دیسی گھی کا مساج کریں اس سے آپ کے ہونٹ ٹھیک ہو جائیں گے اوراگر ٹھیک ہیں تو پھٹنے سے بچ جائیں گے۔

لیموں کا استعمال 

لیموں کے رس کا مناسب استعمال ہونٹوں کو نرم اور ملائم بنادیتا ہے۔ ایک چمچہ بالائی لیں اور اس میں تین قطرے لیموں کا رس ملا کر ایک گھنٹے کے لیے فریج میں رکھ دیں اور سونے سے قبل اس آمیزے کو اپنے ہونٹوں پر لگائیں۔ اس سے آپ کے ہونٹوں کی دلکشی برقراررہے گی۔اور ہونٹ نرم و ملائم ہو جائیں گے۔

ہونٹوں کو پتلا اور خوبصورت اور گلابی بنانے کیلئے پسی ہوئی پھٹکری میں چار قطرے لیموں اور چار قطرے عرق گلاب ڈالیں اور ان تینوں کو ملا کر دن میں دوسے تین بار اور رات کو سوتے وقت لگائیں۔ اس طرح سے ہونٹ نہ صرف پتلے اور خوبصورت ہوں گے بلکہ ان کا کالا پن بھی دور ہو جائیگا۔

عرق گلاب اور گلیسرین کا استعمال

ایک چمچ گلیسرین اور ایک چمچ عرق گلاب کو اچھی طرح ملادیں اور اسے ہونٹوں پر لگا کر سو جائیں، صبح اٹھ کر عام پانی سے دھولیں۔ اس نسخےسے نہ صرف آپ کے ہونٹوں کی دلکشی اور تازگی برقرار رہے گی ۔بلکہ دیکھنے والے بھی تعریف کرنے پر مجبور ہو جائیں گے۔ بقول میر تقی میر: نازکی اس کے لب کی کیا کہئے، پنکھڑی ایک گلاب کی سی ہے۔

لپ اسٹک کا استعمال

لپ اسٹک لگانا باقاعدہ ایک فن کا درجہ رکھتا ہے آپ اپنے ہونٹوں کو اس وقت تک نمایاں نہیں کر سکتیں جب تک کہ آپ کو ہونٹوں پر لپ اسٹک لگانا نہ آجائے۔میک اپ کے بعد اگر ہونٹوں پر لپ اسٹک نہ لگائی جائے تو چہرہ ادھورا اور نامکمل سا لگتا ہے۔

ہونٹوں کو خوبصورت، دلکش، نرم و ملائم اور گلابی بنانے کے طریقے

ہونٹوں کو سنہری اور دلاویز بنانے کیلئے لپ اسٹک استعمال کرنے سے پہلے تھوڑی سی فاؤنڈیشن بھی ضرور لگا لینی چاہئے۔ اس سے وہ ناگوار لائنیں غائب ہو جائیں گی۔ جو بڑھتی ہوئی عمر کی نشاندہی کرتی ہیں۔ہونٹوں پر لپ اسٹک ہمیشہ چہرے کی رنگت اور لباس کی رنگ سے میچ کرتی ہوئی لگائیں ورنہ لپ اسٹک کا مناسب شیڈ اچھے میک اپ کو بھی خراب کر دیگا جو کہ آپ کی خوبصورتی کو بے حد متاثر کریگا۔

سبزچائے کے ٹی بیگ:

سبز چائے کے جہاں بے شمار فوائد ہیں، وہیں یہ ہونٹوں کو نرم و ملائم بنانے میں اہم کردار ادا کرتی ہے۔ سبز چائے کااستعمال شدہ ٹی بیگ لیں اوراسے اپنے ہونٹوں پر لگا کر دبا لیں اوردو سے چار منٹس تک ایسے ہی رہنے دیں ۔ اس کے بعد ٹی بیگ ہٹالیں۔ اس نسخے کو ہفتے میں دو سے چار بار استعمال کریں پھر دیکھیں اس کا جادوئی اثر جو نہ صرف ہونٹوں کی خشکی ختم کردے گا بلکہ انہیں نرم اور ملائم بھی بنادے گا۔

چینی کا استعمال

چینی بھی مردہ اورخشک ہونٹوں کو تازگی دیتی ہے، آدھا چمچہ چینی لیں اور اس میں دو قطرے زیتون کا تیل ڈال کراسے اچھی طرح ملا لیں۔ نرم بالوں والا برش لے کر اس آمیزے کو اپنے ہونٹوں پر لگائیں اور تین سے پانچ منٹ لگا رہنے دیں پھر پانی سے دھو کر نرمی سے صاف کریں۔

بالائی کا استعمال

ہونٹوں پر قدرتی لالی لانے کیلئے تھوڑا اسا زعفران لے کر پیس لیں اور اس میں بالائی ملا کر اپنے ہونٹو ں پر لگائیں۔ اور پانچ منٹ کے بعد ہونٹ صاف کر لیں۔ اس سے نہ صرف ہونٹ نرم ہوں گے بلکہ ہونٹوں پر قدرتی لال بھی آ جائے گی۔اور ہونٹوں کے بل بھی دور ہو جائیں گے۔

کسی وجہ سے ہونٹ سیاہ پڑ گئے ہوں تو کچے دودھ میں روئی کے ٹکڑے کو بھگو کر ہونٹوں پر نرمی سے دن میں تین سے چار بار لگائیں۔ کچھ دنوں کے باقاعدہ استعمال سے ہونٹ گلابی ہو جائیں گے۔

لپ اسٹک لگانے میں احتیاط

بعض خواتین کا ایک ہونٹ موٹا اور دوسرا پتلا ہوتا ہے، یا پھر بعض خواتین کے ہونٹ بہت پتلے ہوتے ہیں۔ تو اس صورت میں لپ اسٹک لگاتے وقت بہت ماہرانہ انداز میں اگر لپ پنسل سے آؤٹ لائن بنا کر دونوں ہونٹوں میں یکسانیت پیدا کر لی جائے تو اس سے اچھا تاثر ابھرتا ہے۔

یہ بھی پڑھیے: جوؤں سے نجات کے آسان طریقے

آؤٹ لائن بنانے کیلئے جو لپ اسٹک یا لپ پنسل استعمال کریں اس کا رنگ آپ کے لپ اسٹک کے رنگ سے قدرے گہرا ہونا چاہئے۔ اس کے بعد احتیاط کریں کہ کھانے پینے کے دوران میں لپ اسٹک اترنے نہ پائے۔ ورنہ ہونٹوں کی ساخت بھدی معلوم ہونے لگے گی۔

Honton ko Khubsurat aur Gulabi banana

ہونٹوں کو خوبصورت اور دلکش بنانے سے متعلق اگر کوئی چیز آپ کی سمجھ میں نہیں آئی ہے یا آپ اس تحریر کے حوالہ سے مزید معلومات حاصل کرنا چاہتی ہیں تو آپ ہمیں کمنٹس کر سکتی ہیں۔

آپ کے ہر سوال،ہر کمنٹس کا جواب دیا جائے گا۔ تاہم اگر آپ کو یہ تحریر اچھی لگی ہے تو آپ اسے سوشل میڈیا پر بھی شیئر کر سکتی ہیں۔ تاکہ آپ کی سہلیوں وغیرہ کی بھی بہتر طور پر راہنمائی ہو سکے۔

اپنی رائے کا اظہار کریں