میٹھے اور لال تربوز کی پہچان کے پانچ طریقے

تربوز ایک ایسا پھل ہے جو پیاس اور گرمی کی شدت کو ختم کرتا ہے ۔اس کا باقاعدہ استعمال انسانی جلد کو خوبصورت اور روشن بناتا ہے۔اس میں وٹامن اے اور سی شامل ہونے کے علاوہ یہ کینسر اور دل کی بیماریوں کے بچاؤ میں بھی نہایت مفید ہے۔

تربوز میں 90 فیصد پانی ہوتا ہے اور یہ انسانی جسم کو پانی کی کمی کا شکار نہیں ہونے دیتا۔ لیکن ان سب سے بڑھ کر اس کا ذائقہ اسی وقت بھاتا ہے جب تربوز میٹھا اور پکا ہوا ہو۔

میٹھے اور لال تربوز کی پہچان

آپ تربوز خریدتے وقت اس کے ٹکڑے کو دیکھ کر اس کے میٹھے ہونے کا اندازہ لگاتے ہوں گے لیکن اس کے باوجود بھی اگر یہ پھیکا نکل آئے تو پھر مزہ کرکرا ہوجاتا ہے۔ تربوز خریدنا کسی رسکی سرمایہ کاری سے کم نہیں کیونکہ یہ عام طور بہت بڑے ہوتے ہیں اور اگر پھل فروش کاٹ کر نہ دکھائے تو جاننا لگ بھگ ناممکن ہوتا ہے کہ یہ اندر سے کیسا ہوگا۔

اگر آپ میٹھااور پکا ہوا تربوز خریدنا چاہتے ہیں تو ان چند چیزوں کے بارے میں جان لیں۔ اس سے آپ کو تربوز کاٹے بغیر ہی پتا چل جائے گا کہ جو تربوز آپ خرید رہے ہیں وہ اندر سے کتنا لال اور میٹھا ہے۔

تربوز کے وزن کا موازنہ

تربوز کا وزن کرنا

اگر آپ تربوز کو اٹھائیں اور وہ بہت وزنی محسوس ہو یعنی دیکھنے کے مقابلے میں زیادہ بھاری محسوس ہو تو سمجھ لیں کہ آپ نے درست پھل کو انتخاب کیا ہے۔تربوز کو ہاتھ میں اٹھا کر اس کا وزن کر کے تسلی کریں کہ اس کا وزن اس کی جسامت سے زیادہ ہونا چاہیے۔

اس کے لیے آپ عین اسی جسامت کے دوسرے تربوز سے بھی موازنہ کرسکتے ہیں۔ اب جو پھل جتنا وزنی اور بھاری ہوگا اتنا ہی وہ میٹھا اور تیار ہوگا۔ اسی اصول کو دوسرے پھلوں کے لیے بھی آزمایا جاسکتا ہے ۔تربوز جتنا وزنی ہوگا اتنا ہی زیادہ اچھا ہونے کا امکان ہے۔

تربوز کی سطح ہموار اور گولائی یکساں ہو

خیال رہے کہ تربوز ہموار اور یکساں گولائی کے ساتھ ہو اور اس پر کوئی خاص نشان، کٹ کا نشان اور کہیں سے بھنچا ہوا نہ ہو۔ ان نشانات اور غیرہموار سطح کا مطلب یہ ہوسکتا ہے کہ نمو کے دوران تربوز کو اچھی طرح سورج کی روشنی نہیں ملی ہے

جس کا مطلب ہے کہ پھل مکمل طور پر پکا ہوا نہیں۔ اور تربوز کو کاشت کے دوران پانی کی اچھی مقدار نہیں مل سکی ہے۔ اس لیے کوشش کریں کہ صرف ایسا ہی تربوز خریدیں جو ہموار اور یکساں گولائی والا ہو۔

تربوز پر پیلے دھبے کا نشان
میٹھے اور لال تربوز کی پہچان کے طریقے، تربوز پر پیلا دھبہ

تربوز زمین پر رکھے ہوتے ہیں اور وہیں پکتے ہیں لیکن جو حصہ زمین کو چھوتا ہے وہ ہلکا یا بہت گہرا پیلا ہوسکتا ہے اسے فیلڈ اسپاٹ بھی کہا جاتا ہے۔ اس جگہ دھوپ نہ پہنچنے سے یہ حصہ مکمل طور پر تو سبز نہیں ہوتا لیکن ہلکا اور گہرا پیلا ضرور ہوجاتا ہے۔

کسی تربوز کے پکے اور کھانے کے قابل ہونے کی سب سے بڑی نشانی اس پرموجود ایک نشان یا دھبہ ہوتا ہے۔اسی لیے یہ دھبہ جتنا گہرا ہوگا پھل اتنا ہی میٹھا ہوگا۔تاہم اگر یہ نشان زردی مائل سبز یا سفید ہو تو اس کا مطلب ہے کہ یہ تربوز کھانے کے لیے ابھی پکا نہیں۔

یہ بھی پڑھیے: اصلی اور خالص شہد کی پہچان کے گیارہ طریقے

تربوز کی رنگت

تربوز کی رنگت گہرے لیکن کم چمکیلی یعنی بھدی ہونی چاہیے۔ اگر ایسا ہے تو تربوز انتہائی میٹھا ہو گا۔اور کھانے کا مزہ دوبالا ہو جائے گا۔ بصورت دیگر پیسوں کے ضائع کے کچھ نہ ہاتھ آئے گا۔اس لئے تربوز خریدتے وقت اس کی رنگت کو ضرور مدنظر رکھیں۔

تربوز کو بجا کر دیکھنا

میٹھے اور لال تربوز کی پہچان کے طریقے، تربوز کو بجا کر دیکھنا

تربوز کو لینے سے پہلے ہلکے سے ہاتھ سے بجا کر دیکھیں اور اگر وہ آواز کرخت یا کسی چیز کو ٹھونکنے جیسی لگے تو اس کا مطلب ہے کہ تربوز ابھی کچا ہے اس لئے اسے مسترد کردیں تاہم اگر یہ آواز ایسی ہو جیسے تاروں کو چھیڑا گیا ہو توایسے تربوز کا انتخاب کر لیں۔

ایزی استاد اب رومن اردو میں بھی

اگر تربوز ان پانچوں ٹیسٹوں میں کامیاب ہوگیا۔ توانشا اللہ سرخ ،میٹھا اور ذائقہ سے بھر پور ہوگا۔

میٹھے اور لال تربوز کی پہچان کے حوالہ سے اگر کوئی چیز آپ کی سمجھ میں نہیں آئی ہے یا آپ اس تحریر کے حوالہ سے مزید معلومات حاصل کرنا چاہتے ہیں تو آپ ہمیں کمنٹس کر سکتے ہیں۔ آپ کے ہر سوال،ہر کمنٹس کا جواب دیا جائے گا۔

اگر آپ کو یہ تحریر اچھی لگی ہے تو آپ کا حق بنتا ہے کہ اسے فیس بک پر زیادہ سے زیادہ شیئر کریں۔ تاکہ آپ کے دوست احباب کی بھی بہتر طور پر راہنمائی ہو سکے۔

اپنی رائے کا اظہار کریں