ٹماٹر کے فوائد، اہمیت اور خصوصیات

کیا آپ جانتے ہیں کہ ٹماٹر سبزی نہیں بلکہ پھل ہے اوریہ ایک ایسا سرخ پھل ہے جو اپنے اندر بے شمار فوائد رکھتا ہے ٹماٹر کو کئی طریقوں سے استعمال کیا جا سکتا ہے ٹماٹر کھانے کا سب سے بڑا فائدہ اس میں موجود لائکوپین ہے یہ ایک طاقتور اینٹی آکسیڈنٹ (Antioxidant) ہے جو کہ سرطان کے سیل (Cell) کو بننے سے روکتا ہے اور انسانی صحت کو درپیش مسائل اور بیماریوں سے بھی محفوظ رکھتا ہے۔

ٹماٹر میں موجود لائکوپین کی اہمیت:

انسانی جسم کو بیرونی ذرائع سے  لائکو پین چاہیے ہوتا ہے تاکہ جسم کا نظام ٹھیک طریقے سے چلتا رہے۔کیونکہ انسانی جسم میں موجود مضر صحت فری سیل لائکوپین کے ساتھ جسم سے خارج ہو جاتے ہیں اس میں بڑی مقدار میں اینٹی آکسیڈنٹ اجزاء ہوتے ہیں اور بے شمار غذائیت بخش اجزاء سے بھی مالا مال ہے۔لائکوپین ایسا اینٹی آکسیڈنٹ ہے جو انسانی جسم میں پیدا نہیں ہوتا۔ اس لئے لائکو پین کے معاملے میں ہمیں ٹماٹر پر انحصار کرنا پڑتا ہے۔ اکثر دیگر پھل اور سبزیوں میں بھی ضروری صحت بخش اجزاء ہوتے ہیں مگر لائکوپین کے معاملے میں جس قدر ٹماٹر مالا مال ہے کوئی اور نہیں ہے۔

ٹماٹر میں موجود لائکوپین کا کردار:

سرطان اور خاص کر پروسٹیٹ سرطان، رحم کا سرطان، آنتوں اور پیٹ کا سرطان، منہ اور غذائی نالی کا سرطان ان سب کے بارے میں یہ کہا گیا ہے کہ ان کو روکنے اور ان کے خلاف مزاحمت پیش کرنے میں لائکوپین زبردست کردار ادا کرتا ہے۔ لائکوپین پہلے سے موجود سرطان کے خلیوں کو ختم کرتا ہے اور بعد میں پیدا ہونے والے خلیوں کو روک دیتا ہے۔ ٹماٹر کی اہمیت کا اس سے بڑا ثبوت اور کیا ہو سکتا ہے۔ کہ ٹماٹرنہ صرف  سرطان، امراض قلب سے محفوظ رکھتا ہے بلکہ کولیسٹرول (Cholesterol) کو بھی اعتدال میں رکھنے میں مددگار ثابت ہوتا ہے

ٹماٹروں کی اہمیت

ٹماٹر اب تک پھلوں اور سبزیوں کے مقابلے میں ان بیماریوں سے محفوظ رکھنے میں زیادہ موثر ثابت ہوئے ہیں۔ جو بنی نوع انسان کی جان کو عموما لگی رہتی ہیں۔ بازار میں ٹماٹر کی بے شمار اقسام موجود ہیں اور ایسے میں اس کو استعمال کرکے صحت بخش فوائد حاصل کرنا اور بھی آسان ہو گیا ہے اگر آپ بھی اس سے سو فیصد مستفید ہونا چاہتے ہیں تو اسے خود اپنے فارم میں اْگائیں۔ یہ ایک تفریحی عمل ہوگا۔ آپ کو دھوپ کے ذریعے کچھ وٹامن ڈی بھی مل جائے گا اور ٹماٹر تو ہے ہی صحت بخش۔

ٹماٹروں کا جوس

ٹماٹر کا جوس لائکوپین سے بھرپور ہوتا ہے اور وہ تمام فوائد حاصل ہو سکتے ہیں جن کا اوپر تذکرہ کیا گیا ہے۔ مطلب اگر کوئی شخص روازنہ ٹماٹر کا جوس مذکورہ مقدار میں پیئے تو وہ ساری زندگی صحت مند رہ سکتا ہے۔اس میں شک نہیں کہ ٹماٹر کے صحت پر جو مثبت اثرات مرتب ہوتے ہیں ان کو ہرگزرنے والے دن کے ساتھ دستاویزی شکل دی جارہی ہے اور ہرگزرنے والے دن کے ساتھ ہمیں اس کے بارے میں کچھ نہ کچھ نیا ہی معلوم ہوتا ہے۔

ٹماٹروں سے متعلق تحقیق و مطالعہ

اگرچہ ٹماٹر مختلف فارم میں لگایا جاتا ہے اور اس کی شکل ایک دوسرے سے الگ ہوتی ہے مگر غذائیت میں سب برابر ہوتے ہیں۔ جب ٹماٹر کی پروڈکٹس بناتے وقت حرارت کے عمل سے گزارا جاتا ہے تو لائکوپین میں کمی ہونے کی بجائے اور اضافہ ہوجاتا ہے۔ اگرچہ ٹماٹر کے انسانی صحت پر اثرات کے حوالے سے بہت کچھ لکھا گیا اور تحقیق بھی کی گئی ہے اس کے باوجود میڈیکل سائنس کمیونٹی یہ سمجھتی ہے کہ وہ اب بھی ٹماٹر کے سارے فوائد کے بارے میں جاننے میں ناکام رہے ہیں اور اس حوالے سے مسلسل تحقیق کی جارہی ہے۔

حصول اولادمیں ٹماٹروں کا کردار

اولاد کی نعمت سے محروم جوڑے اس انمول تحفے کے حصول کیلئے ہر طرح کی تگ و دو کرتے ہیں اور بعض اوقات علاج پر لاکھوں کروڑوں بھی خرچ کردیتے ہیں۔لیکن ایک حالیہ تحقیق سے پتہ چلا ہے کہ تولیدی صحت کی بہتری کیلئے ٹماٹر کرشماتی اثرات رکھتے ہیں اور ٹماٹر کھانے سے مردوں میں سپرم کی تعداد میں 70 فی صد کا ناقابل یقین اضافہ ہوسکتا ہے۔ ڈاکٹروں کا کہنا ہے کہ چونکہ اولاد نہ ہونے کا سبب جتنا عورت کے مسائل ہوسکتے ہیں اتنے ہی مردوں کے مسائل بھی بے اولادی کا سبب بن سکتے ہیں اور چونکہ ٹماٹر مردوں میں سپرم کی تعداد اور صحت میں خاطر خواہ اضافہ کرسکتا ہے تو یہ عمومی تولیدی صحت کی بہتری کیلئے بہت ہی اچھی خبر ہے۔یہ تحقیقی رپورٹ امریکی ریاست اوہانیو کے کلیو لینڈ کلینک نے شائع کی ہے۔

ٹماٹر کی یہ حیرت انگیز خصوصیت اس میں موجود ایک مادے لائیکو پین کی وجہ سے ہے اور اسی جادوئی مادے کی وجہ سے ٹماٹر کا رنگ چمکدار سرخ ہوتا ہے۔ تحقیق کاروں کا کہنا ہے کہ ٹماٹر کے اس فائدے پر مزید کام کرنے کی ضرورت ہے تاکہ بے اولاد جوڑے اولاد کی خوشی دیکھ سکیں۔

ٹماٹروں کی خصوصیات

ٹماٹر میں موجود وٹا من بی بلڈپریشر اور کولیسٹرول کی سطح کو کم رکھنے میں معاون ہوتا ہے۔اس کے نتیجے میں یہ فالج ، دل کے د ورے اور دیگر خطرناک مسائل سے بچاتا ہے۔
ٹماٹر میں موجود وٹامن اے آپ کے بالوں کے لیے مفید ہے جو بالوں کو مضبوط اور چمک دار رکھتا ہے، اس کے علاوہ یہ آنکھوں ، دانتوں ، جلد اور ہڈیوں کے لیے بھی مفید ہے۔ ٹماٹر میں موجود وٹا من اے نظر کو درست رکھنے میں مدد کرتا ہے۔
ٹماٹر میں معدن کرومیم بھی خاصی مقدار میں ہوتا ہے جو کہ ذیابیطس کے مریضوں میں بلڈشوگرکو کنٹرول میں رکھتا ہے۔
ٹماٹر سگریٹ نوشی سے ہونے والے نقصان کو بھی کم کرتا ہے۔
ٹماٹر کو بیجوں کے بغیر کھایا جائے تو یہ پتے اور گردے کی پتھری کے خطرے کو کم کرتا ہے۔
ٹماٹر جلد کے لیے بھی مفید ہے کیونکہ اس میں موجود لائسوپین نامی مادہ جلد کی حفاظت کرتا ہے۔اس سلسلے میں ٹماٹر کے استعمال کا ایک طریقہ یہ ہے کہ دس بارہ ٹماٹروں کا چھلکا اتاریں اور چھلکے کو اپنے چہرے یا کسی بھی حصے کی جلد پر بچھادیں اور دس منٹ تک بچھا رہنے دیں۔اس کے بعد اس کو دھودیں۔آپ کی جلد پہلے سے زیادہ تروتارہ اور چمک دار ہوجائے گی
یہ انٹی آکسیڈنٹ ہے۔ٹماٹر میں وٹامن اے اور سی خاصی مقدار میں پائے جاتے ہیں جو کہ انٹی آکسیڈنٹ ہیں اور خون میں موجود فری ریڈیکلز کو نیوٹرلائز کرتےہیں بصورت دیگر یہ فری ریڈیکلز خلیات کونقصان پہنچاسکتے ہیں۔ٹماٹر کو پکانے سے زیادہ تر وٹامن سی ضایع ہوجاتی ہے اس لیے ٹماٹروں کو کچا بھی کھائیں۔
اسٹڈیز سے یہ بات سامنے آئی ہے کہ ٹماٹر میں موجود آئسوپین مردوں میں غدودوں کے کینسر کے خطرے کو کم کرتا ہے۔ اس کے علاوہ یہ مادہ معدے اور آنتوں کے کینسر سے بھی بچاتا ہے۔آئسوپین ایک ایسا قدرتی انٹی آکسیڈنٹ ہے جو کینسر کے خلیات کی افزائش کو روکتا ہے۔مزے کی بات ہے کہ پکا ہوا ٹماٹر کچے ٹماٹر کے مقابلے میں زیادہ لائسوپین پیدا کرتا ہے اس لیے ٹماٹر کا سوپ پینا صحت کےلئے نہایت فائدے مند ہے۔
ٹماٹر میں وٹامن کے اور کیلشیم بھی خاصی مقدار میں پایا جاتا ہے جو کہ ہڈیوں اور ہڈیوں کے ٹشوز کے لیے مفید ہوتا ہے۔
امریکہ میں ٹماٹروں کے استعمال کی شروعات

1800 تک امریکہ میں ٹماٹر استعمال نہیں کیا جاتا تھا۔ اس کی ابتداء دہائی کے دوران نیوجرسی کا ایک شخص کرنل رابرٹ گیبون جونسن اسے بیرونِ مْلک سے امریکہ لے کر آیا چونکہ لوگ ٹماٹر سے خائف تھےلہذا اس نے اعلان کیا کہ وہ 26 ستمبر 1820 کو ٹماٹر کھانے کا مظاہرہ کرے گا اس نے اپنے آبائی شہر سلیم (Salem) میں سینکڑوں لوگوں کے سامنے مظاہرہ کیا اور ٹماٹر کی پوری ایک ٹوکری کھا گیا۔ لوگ اس انتظار میں تھے کہ بس یہ لڑھکنے ہی والا ہے مگر ایسا کچھ نہیں ہوا اور تب سے ٹماٹر امریکیوں کی غذا کا ایک اہم جزو بن گیا۔

ٹماٹر بطور سوپر فوڈز

ٹماٹر میں جو لال لال ہوتا ہے اْسے لائکوپین کہتے ہیں یہ مرکب اینٹی اکسیڈنٹ ہوتا ہے اور فری ریڈیکل سیل کو نیوٹرلائز (Neutralize) کرتا ہے جو انسانی سیل کو نقصان پہنچاتے ہیں۔ ابھی حال ہی میں مطالعہ سے پتہ چلا ہے کہ ایک اور جانا پہچانا اینٹی آکسیڈنٹ بیٹا کروٹین (Beta-carotene) کے مقابلے میں لائکوپین دوگنی قوت کا حامل ہے۔ ہارڈورڈیونیورسٹی  کی ایک تحقیق کے نتیجے میں یہ بات سامنے آئی ہے کہ جو شخص ہفتہ میں دس بار ٹماٹر کھاتا ہے اس میں سرطان کے امکانات 45 فی صد کم ہو جاتے ہیں۔ تاہم اس کے فوائد صرف پروسٹیٹ کینسر تک ہیں۔

اٹلی کی تحقیق نے دریافت کیا ہے کہ جو شخص روزانہ ٹماٹر بطور سلاد کھاجاتا ہے اس میں آنتوں اور پیٹ میں سرطان ہونے کے خطرات میں 60 فی صد کمی آجاتی ہے۔ تحقیق کاروں کے مطابق لائکوپین پھیپھڑے، چھاتی اور رحم کے سرطان کے خلاف سخت مزاحمت پیش کرتا ہے۔ یہ بھی بتایا گیا ہے کہ لائکوپین کی وجہ سے بزرگ لوگ زیادہ عرصہ تک سرگرم رہ سکتے ہیں۔حالیہ تحقیق میں ٹماٹر کو ‘سوپر فوڈز’ کی گیٹیگری میں شامل کیا گیا ہے ۔

ٹماٹر کے فوائد:

ٹماٹر کے حوالے سے پوری دنیا میں تحقیق اور مطالعہ کیا گیا اور میڈیکل سائنس  اس حوالے سے لوگوں کو بلاشبہ بہت کچھ بتا چکی ہے مگر سچ تو یہ ہے کہ جو کچھ لوگوں تک پہنچایا جا چکا ہے اس سے کہیں زیادہ ٹماٹر کے فوائد ہیں ۔ جن میں سے چند ایک یہ ہیں:

کینسر سے بچاؤ

ٹماٹر میں لائکوپین بڑی تعداد میں شامل ہوتا ہے جس کے بارے میں مانا جاتا ہے کہ اس کے استعمال سے مختلف قسم کے کینسر سے بچنے میں مدد ملتی ہے۔ لائیکوپین سے حساس جلد کو الٹراوائلٹ لائٹ سے بھی بچاتا ہے جو خواتین میں جلد کے کینسر کی بڑی وجہ ہے۔

دائمی بیماریوں سے نجات

کرومیم کی موجودگی کے باعث ٹماٹر شوگر کی سطح  کو درست کرتا ہے، انسولین کے خلاف مزاحمت کم کرتا ہے اور ذیابیطس (شوگر) کے لیے استعمال ہونے والی ادویات کی افادیت بڑھاتا ہے۔ اگر آپ ریموٹائیڈ ارتھرائٹس کا شکار ہیں توآپ کو ٹماٹر کے استعمال سے جوڑوں اور پٹھوں کے درد میں آرام ملے گا۔

ٹماٹر استعمال کرنے کے فوائد

ٹماٹر کھانے کے بے شمار فوائد ہیں۔ ٹماٹر میں ایسے مرکب شامل ہیں جو سرطان، امراض قلب موتیا اور دیگر عارضہ میں نہ صرف بہت مفید ثابت ہوئے ہیں بلکہ ان کے خلاف سخت مزاحمت کرتے ہیں اور ان کے جراثیم ہونے سے روکتے ہیں۔

گوشت کا نعم البدل  |  مصالحہ جات کا سردار

ٹماٹر میں وٹامن سی کی بھاری مقدار ہوتی ہے ایک انسان کو روزانہ جس قدر یہ وٹامن چاہیے اس کا 40 فی صد ٹماٹر سے حاصل ہو سکتا ہے۔ اس کے ذریعے وٹامن اے 15 فی صد، پوٹاشیم 8 فی صد اور 7 فیصد آئرن خواتین جبکہ دس فیصد آئرن مردوں کو ملتا ہے۔

ٹماٹر پھل یا سبزی

بہت سے لوگ ٹماٹر کو سبزی کی فہرست میں شامل کرتے ہیں، جبکہ حقیقت اس کے بالکل برعکس ہے۔ ٹماٹر سبزی نہیں بلکہ پھل ہے۔ جس کے ان گنت فوائد ہیں۔ ان فوائد کی بناء پر ٹماٹر کو سپر فوڈز کی کیٹگری میں رکھا جاتا ہے۔

دل، دماغ اور ہڈیوں کیلئے مفید

ٹماٹر میں پوٹاشیم کی موجودگی ثابت کرتی ہے کہ پکے ہوئے ٹماٹر سے دماغ تیز ہوتا ہے۔ اگر آپ 35 سال سے زائد عمر کے ہیں تو روزانہ ایک گلاس ٹماٹر کے شربت کا استعما ل کریں جس سے آپ کو بڑی تعداد میں وٹامن کے اور کیلشیم ملے گا جو ہڈیوں کی بہتر انداز میں مرمت میں مددگار ثابت ہوگا جبکہ ہڈیوں کی کچھ بیماریوں سے بچاؤ میں بھی مدد ملے گی۔اس لئے بجا طور پر یہ کہا جا سکتا ہے کہ ٹماٹر دل، دماغ اور ہڈیوں کے لئے نہایت مفید ہے۔

ہاضمہ بہترکرتا ہے اور آنکھوں کی روشی تیز کرتا ہے

ٹماٹر میں وٹامن اے کی موجودگی کے باعث یہ سیلز کو پہنچنے والے نقصان  کو ختم  کرتا ہے اور آنکھوں کی روشنی تیز کرتا ہے۔ اس کے استعمال سے ہاضمے میں بھی مدد ملتی ہے اوریہ ہمارے میٹابولیزم کو بھی بہتر بناتا ہے۔ ٹماٹر کھانے کو ہضم کرتا ہے۔ طاقت اور فرحت بخشتا ہے۔دیگر فوائد کے ساتھ ساتھ یہ قبض کشا بھی ہے۔

ٹماٹر کا جوس اور اس کے فوائد:

تازہ ٹماٹر کا رس (جوس)جسمانی چربی کو کم کرنے کیساتھ ساتھ کینسر سے بھی محفوظ رکھتا ہے۔ ماہرین کا کہنا ہے کہ ٹماٹر کا جوس پینے سے مدافعتی نظام مضبوط ہوتا ہے اور جوس کے استعمال کے دوران مرد اور خواتین کو اپنی روزانہ کی کھانے پینے کی عادات میں تبدیلی نہیں لانا پڑتی۔

تائیوان یونیورسٹی کے ماہرین صحت کی جانب سے کی گئی تحقیق کے مطابق ٹماٹر کے جوس کی وجہ سے جسم سے اضافی چربی پگھلنے لگتی ہے ۔ جس سے وزن میں خاطر خواہ کمی واقع ہوتی ہے۔تحقیق سے یہ بات بھی سامنے آئی کہ ٹماٹر کے جوس سے کولیسٹرول لیول کم ہوتا ہے ۔ اور خون میں ایک مادہ لائسوفین بڑھتا ہے جو کینسر کیخلاف مدافعت بڑھاتا ہے۔

ٹماٹر کا جوس بنانے کا طریقہ: ماہرین کے مطابق جوس بنانے کیلئے چار کلو ٹماٹر لیکر انہیں اچھی طرح پیسنے کے بعد ان میں دو بڑے چمچ نمک اور چار بڑے چمچ چینی شامل کریں اور دس منٹ تک چولہے پر پکائیں پکانے کے دوران چمچہ ہلاتے رہیں اور اسکے بعد ٹھنڈا کر کے اسے فریج میں رکھ لیں ۔ ٹماٹر کا جوس تیار ہے۔

ٹماٹر سے متعلقہ یہ تحریر آپ رومن اردو میں بھی پڑھ سکتے ہیں۔

نوٹ:ٹماٹر  سے متعلقہ یہ تحریر محض معلومات عامہ کے لئے شائع کی جا رہی ہے۔تاہم  ان ترکیبوں ،طریقوں اور ٹوٹکوں پر عمل کرنے سےپہلے  اپنے معالج ( طبیب،ڈاکٹر )سے مشورہ ضرور کریں۔اور دوران عمل اپنے معالج سے رابطہ میں رہیں۔

اگر آپ کو یہ تحریر اچھی لگی ہے تو آپ کا حق بنتا ہے کہ اسے فیس بک پر زیادہ سے زیادہ شیئر کریں۔ تاکہ آپ کے دوست احباب کی بھی بہتر طور پر راہنمائی ہو سکے۔

اپنی رائے کا اظہار کریں